مسلم لیگ کا کلچر تبدیل ہو گیا، ہاتھ باندھ کر سب باتیں نہیں سنیں گے،مریم نواز

مسلم لیگ کا کلچر تبدیل ہو گیا، ہاتھ باندھ کر سب باتیں نہیں سنیں گے،مریم نواز اسلام آباد( پرل نیوز)سلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نوازنے کہا ہے کہ آزاد کشمیر کے آئندہ انتخابات میں ن لیگ کو فتح حاصل ہو گی۔آئندہ وزیر اعظم راجہ فاروق حیدر ہوںگے۔ سینیٹ انتخابات کے نتائج کے بعد وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ ارکان بک گئے، اورکل وہ انہی بکے ہوئے ارکان سے اعتماد کا ووٹ لیں گے۔ ضمنی اور سینیٹ انتخابات میں حکومت کو مات دے دی ہے، اب مسلم لیگ ن) آزاد کشمیر میں بھی کامیابی حاصل کرے گی، مسلم لیگ کا کلچر تبدیل ہو گیا، ہاتھ باندھ پر سب باتیں نہیں سنیں گے۔ مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز کا کہنا ہے صدر کہہ چکے ہیں کہ وزیراعظم عوام کا اعتماد کھو چکے۔ الیکشن کمیشن نے سپریم کورٹ کے اندر جو رائے دی وہ ذاتی نہیں تھی، الیکشن کمیشن نے آئین کے تحت رائے دی، اور آئین میں ترمیم کا اختیار نہ ہی الیکشن کمیشن اور نہ ہی سپریم کورٹ کو ہے۔ بلوچستان، خیبر پختونخوا میں اربوں پتی لوگوں کو ٹکٹس دیے گئے، بلوچستان اور کے پی کے میں یہ جیتیں تو الیکشن بالکل ٹھیک ہے، اسلام آباد میں ایک نشست ہار جائیں تو الیکشن ٹھیک نہیں ہے۔ کشمیر ہائوس اسلام آباد میں پارٹی رہنمائوں کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے مریم نواز نے کہا ہے کہ الیکشن کمیشن نے سپریم کورٹ میں آئینی پوزیشن لی تھی، سپریم کورٹ نے وہی پوزیشن تسلیم کی جو الیکشن کمیشن نے لی، جب آپ کے غلط کام کو غلط کہیں تو ادارے برے، اب اداروں کو بھی معلوم ہے کہ اداروں کی تضحیک کرنے والے کون لوگ ہیں۔ صدر نے سمری میں لکھا ہے کہ وزیراعظم اعتماد کا ووٹ کھو چکے اسے پبلک کیا جائے، قومی اسمبلی کا اجلاس آئین کی شق 91 کی جز 7 کے تحت بلایا گیا ہے، شق میں درج ہے کہ وزیراعظم اعتماد کھو چکے اور اب وہ اعتماد کا ووٹ لیں۔ انہوں نے کہا کہ ضمنی انتخاب میں جو بات قوم کو سمجھ آ گئی تھی وہ صدر کو کل سمجھ آئی ہے، صدر کو مبارکباد دیتی ہوں کہ انھیں دیر سے ہی لیکن سمجھ آ گئی۔ آزاد کشمیر میں مسلم لیگ ن کے مینڈیٹ کو چرانے کی کوشش کی گئی تو آپ کا بہت برا حال ہو گا، راجا فاروق حیدر اور ان کی پارلیمانی پارٹی آج بھی متحد اور ساتھ ہے، آزاد کشمیر میں گلگت بلتستان کی طرح مینڈیٹ چرانے کی کوشش کی گئی تو ڈسکہ والا حال ہو گا۔ عمران خان نے الیکشن کمیشن کی توہین کی اس پر ایکشن لینا چاہیے، عمران خان فوج کو بھی سیاست میں گھسیٹ رہے ہیں۔ عمران خان پر عدم اعتماد ہو گیا ہے، عمران خان جن اراکین کو بکا کہتے ہیں اب ان ہی سے اعتماد کا ووٹ لینا چاہتے ہیں، عمران خان، اب آپ کو اقتدار سے چمٹے رہنے کا کوئی حق نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ آئندہ عوامی مینڈیٹ چوری کرنے کی کوشش کی گئی تو جان لیں کہ عوام جاگ رہے ہیں، 2018 کے انتخابی نتائج کو نہ تسلیم کیا نہ ہی عمران خان کو وزیراعظم مانتے ہیں، جس جماعت کو یہ کہتے تھے ختم ہوگئی اس کے لیے لوگ ٹکٹ چاہتے ہیں۔ آپ کو استعفی دے دینا چاہیے کیونکہ آپ کا صدر بھی عدم اعتماد کے لیے کہہ رہا ہے ، اس وقت ملک میں کوئی وزیراعظم نہیں ہے۔ لولی لگڑی حکومت کا کیا فائدہ، اقتدار سے چمٹے رہنے کا کیا فائدہ، آپ نے ڈسکہ کا الیکشن چیلنج کیا ہے، اگر اتنا ہی اعتماد ہے تو سپریم کورٹ کیوں گئیسپریم کورٹ کے پیچھے کیوں چھپا جا رہا ہے، عمران خان آئیں عوام کی عدالت میں لوگ آپ کا انتظار کر رہے ہیں۔ مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز نے کہا کہ صدر نے سمری میں لکھا ہے کہ وزیراعظم اعتماد کا ووٹ کھو چکے اسے پبلک کیا جائے، قومی اسمبلی کا اجلاس آئین کی شق 91 کی شق 7 کے تحت بلایا گیا ہے، شق میں درج ہے کہ وزیر اعظم اعتماد کھو چکے اور اب وہ اعتماد کا ووٹ لیں، وزیراعظم نے سینیٹ الیکشن کے نتائج پر کہا کہ لوگ بکے ہیں، اور کل وزیراعظم انہی بکے ہوئے لوگوں سے اعتماد کا ووٹ لیں گے۔سلیکٹڈ وزیراعظم ہے۔ چارو صوبوں کے انتخابات کو چوری کرنے کا حساب مل گیا ہے۔ الیکشن کمیشن کی توہین کی گئی، حکمران جماعت اداروں کو سیاست میں گھسیٹ رہی ہے عمران خان کو عوام کا غضب کا سامنا کرنے پڑے گا ۔ مسلم لیگ ن کے رہنما کیپٹن صفدر اعوان نے کہا ہے کہ یوتھ کے ایک لاکھ نوجوانوں کی لسٹ دی گئی ہے، 26 مارچ کو آمریت کی باقیات، غریب دشمن نظام کے خاتمہ کے لیے اسلام آباد آرہے ہیں۔ 26 مارچ سے قبل ہی گرفتار کر لینا چاہتے ہیں۔ جعلی ایف آر کاٹی گئی ہے۔ جنرل فیض حمید میرے خلاف گامزن ہیں ان خیالات کا اظہار انہوں نے کشمیر ہائوس میں میڈیا سے گفتگو کے دوران کیا۔ انہوں نے کہا کہ مجھے زہر دے کر مارنے کی کوشش کی جاتی رہی لیکن پاکستان کی عوام کی دعائیں میرے ساتھ ہیں مجھے کچھ نہین ہونے والا۔ میری گاڑی پر فائرنگ کی گئی لیکن گھبرانے والا نہیں ہوں۔ انہوں نے کہا کہ چیئرمین نیب کے خلاف ثبوت اکٹھے کر رہا ہوں۔ جلد عوام کے سامنے لاوں گا، اور عدالت جاوں گا۔ انہوں نے کہا کہ ملک کی عوام کی خاطر خدمت کا جذبہ کبھی کم نہیں ہو گا

متعلقہ خبریں

13-03-2018

13-03-2018