21

آزادکشمیر بھرمیں خالصہ سرکارکی الاٹمنٹ پر پابندی عائد

مظفرآباد(صباح نیوز)سپریم کورٹ آزادجموں وکشمیر نے آزادکشمیر بھرمیں خالصہ سرکارکی الاٹمنٹ پر پابندی عائد کرتے ہوئے تجاوزات اور غیرقانونی تعمیرات کے خلاف کارروائی کے لیے کمشنر زاور ڈپٹی کمشنرز کو ہدایات جاری کردی ہیں۔قبل ازیں عدالتی حکم کے تحت بھی الاٹمنٹس پر پابندی عائد تھی۔اس کے باوجود اگر کوئی الاٹمنٹ ہوئی ہے کو منسوخ کیا جائے۔چیف جسٹس جناب جسٹس راجہ سعید اکرم خان،جسٹس خواجہ محمد نسیم،جسٹس رضاعلی خان اور جسٹس محمد یونس طاہر پر مشتمل فل کورٹ نے اپنے حکم میں آزادکشمیر بھر میں خالصہ سرکار کی الاٹمنٹس پر پابندی عائد کرتے ہوئے کمشنرز اور ڈپٹی کمشنرز کو ہدایت کی ہے کہ وہ جملہ خالصہ سرکار پر کی جانے والی تجاوزات اورغیرقانونی تعمیرات کیخلاف ایکشن لیتے ہوئے کارروائی کر کے رپورٹ کریں۔فیصلے میں یہ بھی قرار دیا گیا کہ قبل ازیں بھی عدالت نے خالصہ سرکار کی الاٹمنٹ پر پابندی عائد کررکھی تھی اس کے باوجود الاٹمنٹس ہوئی ہیں جو غیر آئینی اور عدالتی فیصلہ کے مغائر ہیں لہذا ایسی جملہ الاٹمنٹس کو بھی منسوخ کیا جائے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں