11

آزادکشمیر عوامی احتجاج کے بعد حکومت نے گھٹنے ٹیک دے، آٹے کی قیمتوں میں اضافے کا فیصلہ واپس

مظفرآباد(پرل نیوز)آزادکشمیر حکومت نے شدید عوامی احتجاج کے بعد آٹا مہنگا کرنے کا نوٹیفکیشن واپس لے لیا،سابقہ سبسڈی بحال کردی گئی، سیکرٹریٹ خوراک نے بہ مطابق کابینہ فیصلہ نوٹیفکیشن جاری کردیا۔سرکاری آٹا 20 کلو کا تھیلا اب 1280روپے میں دستیاب ہوگا جب کہ فی من فاین آٹا اب 2560 روپے میں دستیاب ہوگا،” صباح نیوز “سے گفتگو کرتے ہوئے وزیر خوراک علی شان سونی نے کہا کہ آزادکشمیر حکومت نے وفاق کی جانب سے فنڈز کٹوتی، آٹے پر کوٹے کمی کے باوجود عوام کو سبسڈی دیدی ہے اس وقت آزاد کشمیر میں آٹا وافر ہے ہماری کل ضرورت اس وقت 5 لاکھ ٹن سے زاید ہے جبکہ اس وقت پاسکو سے 3 لاکھ ٹن گندم مل رہی ہے ایک اور سوال کے جواب میں وزیر خوراک نے کہا کہ وزیراعظم سردار تنویر الیاس نے پاسکو کے 14 ارب ادھار واپسی کا فیصلہ کیا ہے جلد رقم منتقل کردی جائے گی، آٹا ڈیلر دیانت داری سے عوام کو آٹا دیں ذخیرہ اندوزی اور اسمگلنگ کی حوصلہ شکنی کریں گے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں