13

وفاقی حکومت کا پرائم منسٹر یوتھ پروگرام شروع کرنے کا اعلان

وفاقی حکومت نے پرائم منسٹر یوتھ پروگرام دوبارہ شروع کرنے کا اعلان کردیا ہے جس کے تحت ایک بار پھر نوجوانوں کو لیپ ٹاپ اور بلا سود قرضے فراہم کیے جائیں گے
چاروں صوبوں، گلگت بلتستان اور آزاد جموں و کشمیر میں ہاکی کے ٹرائلز مکمل ہو چکے ہیں، ٹیلنٹ پروگرام کے تحت کرکٹ اور فٹ بال کیلئے اب تک 30 ہزار بچوں نے آن لائن درخواستیں دی ہیں،
وزیراعظم یوتھ بزنس و ایگریکلچر لون سکیم کے تحت 50 ارب روپے تقسیم،نوجوانوں اور سیلاب متاثرین کیلئے کاروباری و زرعی قرضہ سکیم کا اجرا آئندہ ہفتے کیا جائے گا، معاون خصوصی وزیر اعظم کی پریس کانفرنس
اسلام آباد(صباح نیوز)وفاقی حکومت نے پرائم منسٹر یوتھ پروگرام دوبارہ شروع کرنے کا اعلان کردیا ہے جس کے تحت ایک بار پھر نوجوانوں کو لیپ ٹاپ اور بلا سود قرضے فراہم کیے جائیں گے۔وزیر اطلاعات مریم اورنگزیب کے ہمراہ اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے وزیر اعظم کی معاون خصوصی برائے امور نوجوانان شزا فاطمہ نے کہا کہ وزیر اعظم نے وزرات عظمی سنبھالتے ہی ابتدائی اجلاسوں میں مجھے یہ ذمہ داری دی کہ پاکستان کی 15 کروڑ نوجوان آبادی کے لیے ایک جامع منصوبہ بنایا جائے، نوجوانوں کو کاروبار کے ذریعے بااختیار بنانے اور سیلاب متاثرین کی سہولت کیلئے کاروباری و زرعی قرضہ سکیم کا باضابطہ اجرا آئندہ ہفتے کیا جائے گا، نیشنل یوتھ ایمپلائمنٹ پالیسی کا جلد اجرا کیا جائے گا، ایک سال میں 20 لاکھ نوجوانوں کو روزگار فراہم کرنے کا منصوبہ بنایا ہے، سکلز ڈویلپمنٹ پروگرام کے تحت ایک لاکھ نوجوانوں کو تربیت دی جائے گی،وزیراعظم یوتھ بزنس و ایگریکلچر لون سکیم کے تحت 50 ارب روپے تقسیم کئے جائیں گے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے بدھ کو وفاقی وزیر برائے اطلاعات و نشریات مریم اورنگزیب کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہا کہ 2022 میں پاکستان مسلم لیگ (ن) نے مشکل معاشی صورتحال میں حکومت سنبھالی، وزیراعظم محمد شہباز شریف نے 68 فیصد نوجوان جو پوری آبادی کا 15 کروڑ بنتے ہیں، کو بااختیار بنانے اور قومی دھارے میں شامل کرنے کیلئے جامع منصوبہ بندی کی ہدایت کی، وزیراعظم کی رہنمائی میں وزارت امور نوجوانان کی ذمہ داریاں پوری کر نے کی کو شش کررہی ہو ں۔انہوں نے کہا کہ 15 کروڑ نوجوان اس ملک کا قیمتی اثاثہ ہیں، نوجوان نسل کی انتھک محنت کے بغیر اس ملک کو درپیش مسائل سے نکالنا نا ممکن ہے، نوجوان موجودہ حکومت کی صحت، تعلیم، روزگار سمیت تمام پالیسیوں کا محور ہیں۔ انہوں نے کہا کہ وزیراعظم کی ہدایت پر وزیراعظم یوتھ پروگرام نوجوانوں کو ملک کا کارآمد اثاثہ بنانے کے لئے کوشاں ہے، اسی سلسلے کی ایک کڑی وزیراعظم یوتھ کاروبار و زرعی قرضہ سکیم ہے۔معاون خصوصی نے کہا کہ یہ پروگرام 2013 سے ملک کے نوجوانوں کو آسان شرائط پر قرضے کی فراہمی یقینی بنا رہا تھا، چند تبدیلیوں کے بعد اس کا دوبارہ اجرا کیا جا رہا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں