پاکستانی سیاستدانوں کو ضابطہ اخلاق بتایا جائے خلاف ورزی پر نااہل ہوسکتے،الیکشن کمیشن

پاکستانی سیاستدانوں کو ضابطہ اخلاق بتایا جائے خلاف ورزی پر نااہل ہوسکتے،الیکشن کمیشن مظفرآباد( پرل نیوز )سیکرٹری( ترجمان ) آزاد جموں و کشمیر الیکشن کمیشن کی جانب سے جاری ہونے والی پریس ریلیز کے مطابق مشاہدہ میں آیا ہے کہ حکومت پاکستان کی طرف سے تشریف فرما ایک وزیر کے حالیہ میرپور اور کوٹلی کے دورہ کے دوران مختلف اجتماعات میں نہ صرف مختلف ایسے منصوبہ جات کا اعلان کیا گیا جو آزادانہ ، منصفانہ اور غیر جانبدارانہ انتخابات کے لیے سوالیہ نشان ہیں۔ بلکہ ایسے اعلانات بھی کئے گئے ہیں جوبراہ راست ووٹ خریدنے کی ترغیب کے زمرے میں بھی آتے ہیں اور یہ عمل آزاد جموںوکشمیر الیکشن کمیشن کی جانب سے جاری کردہ ضابطہ اخلاق کی واضح خلاف ورزی ہے ۔ اس نسبت آزاد جموں و کشمیر الیکشن کمیشن نے چیف سیکرٹری آزاد حکومت ریاست جموں و کشمیر اور ڈپٹی کمشنر ز کو مکتوبات تحریر کرتے ہوئے ہدایت کی ہے کہ انتخابی مہم کے دوران پاکستان سے تشریف لانے والی سیاسی شخصیات اور حکومتی نمائندگان بھی آزاد جموں و کشمیر الیکشن کمیشن کی جانب سے جاری کردہ ضابطہ اخلاق کے پابند ہیں جس کے تحت وہ کسی ایسی ترقیاتی سکیم یا منصوبہ کا اعلان بالواسطہ یابلاواسطہ نہیں کرسکتے جو آزادانہ ، منصفانہ اور غیر جانبدارانہ انتخابات پر اثر انداز ہوں ۔ نیزایسے مہمانوں کی طرف سے کسی بھی قسم کی غیر شائستہ گفتگو نہ صرف ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی ہے بلکہ آزاد کشمیر کے پُر امن ماحول کی خرابی کا باعث بھی بن سکتی ہے۔ لہذا اس امر کو یقینی بنایا جائے کہ آنے والے مہمان اپنی گفتگو تقریر کے دوران شائستگی کے پہلو کو مقدم رکھیں اور ایسی ناشائستہ زبان استعمال نہ کریں جو ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی کے زمرے میں آتی ہے اور جس سے ماحول میں خرابی پیداہونے کا اندیشہ پیدا ہو سکتا ہے۔ لہذا ایسی تمام شخصیات جو پاکستان سے کسی بھی سیاسی جماعت یا امیدوار کی انتخابی مہم میں شریک ہیں ،کی نسبت اس امر کا خصوصی اہتمام فرمایا کہ ان کو کسی بھی پروگرام میں شرکت سے قبل آزاد جموں وکشمیر الیکشن کمیشن کی جانب سے جاری کردہ ضابطہ اخلاق سے آگاہ کیا جائے اور اس امر سے بھی آگاہ فرمایا جائے کہ ان کا کوئی بھی ایسا عمل جو ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی کے زمرے میں آتا ہے متعلقہ امیدوار کی نااہلی پر بھی منتج ہوسکتا ہے۔دریں اثناء آزاد جموںوکشمیر الیکشن کمیشن نے پاکستان پیپلزپارٹی ( شہید بھٹو )آزاد جموںوکشمیر کو سیاسی جماعت ڑجسٹرڈکر دیا ہے۔ علاہ ازیں آمدہ انتخابات 2021کے لئے پاکستان پیپلزپارٹی ( شہید بھٹو) آزاد جموںوکشمیر کو انتخابی نشان ”مکا ” بھی الاٹ کر دیا ہے ۔ قبل ازیںآزاد جموںوکشمیر الیکشن کمیشن نے آمدہ انتخابات 2021کے لئے آزاد کشمیر کے 33حلقوں اور مہاجرین مقیم پاکستان کے 12حلقوں کے لئے امید واران کی حتمی فہرست جاری کر دی ہے ۔ آزاد جموںوکشمیر الیکشن کمیشن پریس ریلیز کے مطابق آزاد کشمیر کے 33حلقوں سے 579امید واران جبکہ مہاجرین مقیم پاکستان سے 122امید وار انتخابات میں حصہ لیں گے ۔ تفصیلات کے مطابق میرپورکے چار حلقوں سے کل تعداد کاغذات نامزدگی 95 درست کاغذات نامزدگی 88 اور حتمی امید واران کی تعداد 80ہے ۔ضلع بھمبر کے 3حلقوں سے کل تعداد کاغذات نامزدگی 63، درست کاغذات نامزدگی 61اور حتمی امید واران کی تعداد 53ہے ۔ ضلع کوٹلی کے 6حلقوں سے کل تعداد کاغذات نامزدگی 152 درست کا غذات نامزدگی147 اور حتمی امید واران کی تعداد104ہے ۔ ضلع باغ کے 4حلقوں سے کل تعداد کاغذات نامزدگی 112درست کاغذات نامزدگی 110اور حتمی امید واران کی تعداد 76ہے ۔ ضلع پونچھ و سدھنوتی کے 6حلقوں سے کل تعداد کاغذات نامزدگی 151، درست کاغذات نامزدگی 148اور حتمی امید واران کی تعداد 114ہے ۔ ضلع نیلم ویلی کے 2حلقوں سے کل تعداد کا غذات نامزدگی 70 درست کا غذات نامزدگی 67اور حتمی امید واران کی تعداد39ہے ۔ ضلع مظفرآباد کے 7حلقوں سے کل تعداد کاغذات نامزدگی 158درست کا غذات نامزدگی 153 اور حتمی امید واران کی تعداد 113ہے ۔ مہاجرین مقیم پاکستان پاکستان جموں کے 6حلقوں سے کل تعداد کاغذات نامزدگی 94درست کاغذات نامزدگی 86اور حتمی امید واران کی تعداد 72ہے ۔ کشمیر ویلی کے 6حلقوں سے کل تعداد کاغذات نامزدگی 78درست کا غذات نامزدگی 74اور حتمی امید واران کی تعداد 50ہے ۔

متعلقہ خبریں

13-03-2018

13-03-2018