سپریم کورٹ کے حکم کے باوجود،بلدیاتی انتخابات میں تاخیری حربے قابل قبول نہیں ہیں حسن ابراہیم

سپریم کورٹ کے حکم کے باوجود،بلدیاتی انتخابات میں تاخیری حربے قابل قبول نہیں ہیں حسن ابراہیم اقتدار نچلی سطح پر منتقل کرنے اور بلدیاتی اداروں کو فعال کرنے کے لئے بلدیاتی ا الیکشن ناگزیر ہیں اسمبلی اجلاس ایجینڈے میں ترمیمی بل یا قرارداد شامل نہیں تھا۔ ایسے عمل سے عوام کا سیاست دانوں پر اعتماد ختم ہوجائے گا، ممبر اسمبلی مظفرآباد(پرل نیوز) جموں کشمیر پیپلز پارٹی کے صدر ممبر اسمبلی سردار حسن ابراہیم خان نے کہا کہ حکومت آزاد کشمیر کی جانب سے سپریم کورٹ کے حکم کے باوجود بلدیاتی انتخابات میں تاخیری حربے قابل قبول نہیں ہیں ۔ ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ اقتدار نچلی سطح پر منتقل کرنے اور بلدیاتی اداروں کو فعال کرنے کے لئے الیکشن ناگزیر ہیں ۔ تمام سیاسی جماعتوں کو الیکشن کمیشن کے ساتھ بیٹھ کر انتخابی فہرستوں اور حلقہ بندیوں کے معاملات یکسو کرکے شیڈول میں ترمیم لا سکتے تھے۔ اسمبلی اجلاس کے لئے جاری ایجینڈے میں ترمیمی بل یا قرارداد شامل نہیں تھا۔ ایسے عمل سے عوام کا سیاست دانوں پر اعتماد ختم ہوجائے گا۔ بلدیاتی انتخابات سے گراس روٹ سے قیادت سامنے آئی گی جو عوام کے مسائل فوری حل کے لئے سودمند ثابت ہو گی طلبہ یونین پر پابندی اور بلدیاتی انتخابات کا انعقاد نہ ہونے کی وجہ سے نئی قیادت پیدا نہیں ہو سکی۔ جموں کشمیر پیپلز پارٹی طلبہ یونین کی بحالی اور بلدیاتی انتخابات کے فوری انعقاد کا مطالبہ کرتے ہوئے حکومتی ہتھکنڈوں کے خلاف اسمبلی فلور پر آواز بلند کرے گی -

متعلقہ خبریں